23

دوستوں کو ”محظوظ” کرنے سے انکار پر شوہر نے بیوی کو قتل کر دیا
کراچی (میڈیا ڈسک) : شہر قائد میں ایک افسوسناک واقعہ پیش آیا جہاں ایک شخص نے اپنے دوستوں کو گھر بلایا اور اپنی بیوی سے انہیں ”محظوظ” کرنے کا کہا ، لیکن جیسے ہی بیوی نے انکار کیا تو سفاک شخص نے اپنے دوستوں کے ساتھ مل کر پہلے بیوی کو اجتماعی زیادتی کا نشانہ بنایا اور بعد میں قتل کر کے لاش کوڑے دان میں پھینک دی۔
میڈیا رپورٹ میں بتایا گیا کہ کراچی کے علاقہ قائد آباد میں ایک شخص نے اپنے دو دوستوں کے ہمراہ بیوی کو اجتماعی زیادتی کا نشانہ بنایا جس کے بعد چاقو کے متعدد وار کیے پھر تیزاب بھی پھینکا، زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے 25 سالہ لڑکی ابدی نیند جا سوئی۔ پولیس نے لاش کوڑے دان سے برآمد کی جس کے بعد خاتون کے شوہر قلب عباس، جو کہ شیر پاو کالونی کا رہائشی ہے ، کو دو دوستوں بختیار اور عبد الصمد کے ہمراہ قتل کے الزام میں گرفتار کر لیا۔

قائد آباد پولیس اسٹیشن کے تفتیشی افسر ذاکر اللہ کے مطابق مقتولہ کا شوہر قلب عباس نے جنسی تشدد کا نشانہ بناتا تھا اور جسم فروشی پر مجبور بھی کرتا تھا۔ قلب عباس نے پولیس کو دئے اعترافی بیان میں کہا کہ مقتولہ کو سب سے پہلے ایک ٹیکسی ڈرائیور امیر نے اغوا کیا اور اپنے گھر لے گیا۔ جس کے بعد امیر کی اہلیہ نے اسے میری والدہ فاطمہ کو بیس ہزار روپے میں فروخت کر دیا۔
پولیس کا کہنا تھا کہ قلب عباس مقتولہ کو تشدد کا نشانہ بنانے کے ساتھ ساتھ ناجائز رشتہ رکھنے ، اپنے دوستوں کی ناجائز خواہشات کو پورا کرنے پر مجبور کرتا تھا جس کے پیش نظر قلب عباس کی والدہ نے مقتولہ سے اس کی شادی کروادی۔ پولیس نے کہا کہ قلب عباس کی سابقہ بیوی صغریٰ نے بھی اس سے انہی وجوہات کی بنا پر علیحدگی اختیار کی تھی۔ تفتیشی افسر نے بتایا کہ 23 اور 24 جون کی درمیانی رات کو قلب عباس اپنے دو دوستوں بختیار اور عبد الصمد کے ہمراہ آیا، تینوں نشے میں دھت تھے، عباس نے مقتولہ کو دوستوں کو ”محظوظ” کرنے اور ناجائز کام پر مجبور کیا جس پر ا±س نے انکار دیا۔
بیوی کے انکار پر طیش میں آ کر قلب عباس نے پہلے ا±س کے ہاتھ پاو¿ں باندھے، اجتماعی زیادتی کی اور تشدد کا نشانہ بنانے کے بعد تیزاب پھینک کر قتل کیا اور لاش کو ویران جگہ پر پھینک کر فرار ہو گئے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں