48

پچھلے کاروباری ہفتے کے دوران پاکستان اسٹاک مارکیٹ میں مجموعی طور پر تیزی کا رجحان غالب رہا کے ایس ای100انڈیکس نفسیاتی حد عبور کر گیا

کراچی(این این آئی)یوم پاکستان کے موقع پر ملک بھر میں عام تعطیل کے باعث 4دنوں تک محدود رہنے والے کاروباری کے کے دوران پاکستان اسٹاک مارکیٹ مجموعی طور پر تیزی کا رجحان غالب رہا اور کے ایس ای100انڈیکس 600پوائنٹس بڑھ گیا جس کی بدولت انڈیکس45ہزار پوائنٹس کی نفسیاتی حد عبور کر گیا جبکہ مارکیٹ کے سرمائے میں89ارب روپے کا اضافہ بھیریکارڈ کیاگیا جس کے نتیجے میں سرمائے کا مجموعی حجم 80کھرب روپے سے تجاوز کر گیا تاہم 52فیصد حصص کی قیمتیں گھٹ گئیں۔یوم پاکستان کی تعطیل کی وجہ سے پاکستان اسٹاک مارکیٹ میں کاروباری ہفتہ5دنوں کے بجائے4دن تک محدود رہا

۔اسٹاک ماہرین کے مطابق مثبت معاشی اشاریوں ،کرنٹ اکائونٹ خسارے میں کمی کی وجہ سے معیشت میں نمو کی وسیع گنجائش اور فروری کی نسبت کرنٹ اکائونٹ خسارہ76فیصد کم ہونے ،ترسیلات زر کی حوصلہ افزا آمد ،یورو بانڈ کے اجراء کی خبروںاور آئی ایم ایف ایگزیکٹو بورڈکی منظور کے بعد پاکستان کی آئی ایم ایف پروگرام میں دوبارہ شمولت او ر آئی ایم ایف کی جانب سے پاکستان کیلئے500ملین ڈالر کی قسط منظور ہونے کے مارکیٹ پر مثبت اثرات دیکھے گئے جس کی وجہ سے مارکیٹ میں3دن تیزی کا رجحان رہا اور اس دوران کے ایس ای100انڈیکس824.86پوائنٹس بڑھ گیاتاہم آئی ایم ایف کی شرط پر 140ارب روپے کے نئے ٹیکسز عائد کرنے کیلئے منی بجٹ کے اعلان کی خبروں اور گردشی قرضوں پر قابوپانے کیلئے پاور ٹیرف میں 5روپے فییونٹ بڑھانے کے ہدف مقرر کرنے کی اطلاعات سے 1دن مارکیٹ مندی کی لپیٹ میں آگئی جس کی وجہ سے انڈیکس انڈیکس204.54پوائنٹس لوز کر گیا ۔ پاکستان اسٹاک مارکیٹ میں گذشتہ ہفتے کے ایس ای100انڈیکس میں620.32پوائنٹس کااضافہ ریکارڈ کیا گیا جس کے نتیجے میںانڈیکس 44901.31پوائنٹس سے بڑھ کر45521.63پوائنٹس ہو گیا اسی طرح کے ایس ای30انڈیکس245.41پوائنٹس کی اضافے سے 18476.67پوائنٹس سے بڑھ کر18722.08پوائنٹس ہو گیا جبکہ کے ایس ای آل شیئر ز انڈیکس 30750.21پوائنٹس سے بڑھ کر31054.89پوائنٹس پر بند ہوا۔تیزی کے سبب مارکیٹ کے سرمائے میں 89ارب59کروڑ14لاکھ67ہزار787روپے کا اضافہ ریکارڈ کیا گیاجس کے نتیجے میں سرمائے کا مجموعی حجم79کھرب 47ارب26کروڑ5لاکھ47ہزار210روپے سے بڑھ کر80کھرب36ارب85کروڑ20لاکھ16ہزار997روپے ہو گیا ۔پاکستان اسٹاک مارکیٹ میں گذشتہ ہفتے زیادہ سے زیادہ25ارب روپے مالیت کے52کروڑ92لاکھ4ہزار حصص کےسودے ہوئے جبکہ کم سے کم22ارب روپے مالیت کے44کروڑ9لاکھ 89ہزار حصص کے سودے ہوئے تھے ۔پاکستان اسٹاک مارکیٹ میں ٹریڈنگ کے دوران ایک موقع پر انڈیکس46000.86پوائنٹس کی بلند سطح کو چھو گیا تھا تاہم مندی کے سبب ایک موقع پر انڈیکس44735.58پوائنٹس کی کمسطح تک گر گیا تھا ۔پاکستان اسٹاک مارکیٹ میں گذشتہ ہفتے مجموعی طور پر1588کمپنیوں کا کاروبار ہوا جس میں سے696کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں اضافہ ،824میں کمی اور68کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں استحکام رہا ۔کاروبار کے لحاظ سے بائیکو پیٹرولیم ،پاک ریفائنری،حیسکول پیٹرول ،ٹی آر جی پاک لمیٹڈ ،عائشہ اسٹیل مل ،کے الیکٹرک لمیٹڈ ،سوئی نادرن گیس ،ہم نیٹ ورک ،پاک انٹر نیشنل بلک ،یونٹی فوڈز ،پی ٹی سی ایل ،ازگارڈ نائن ،پاک ریفائنری ،فوجی فرٹیلائزر ،میپل لیف، اٹک ریفائنری ،غنی گلوبل ،ٹیلی کارڈ لمیٹڈ اور لوٹے کیمیکل سر فہرست رہے ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں