43

کم عمر بیٹے سے گاڑی چلوانے پر علی امین گنڈا پور کی انوکھی منطق

لاہور (میڈیا ڈیسک) الٹا چور کوتوال کو ڈانٹے اور چور نال چلتر والا جملہ علی امین گنڈاپور پر فٹ آتا ہے کہ کبھی ان کی گاڑی سے شہد کی بوتلیں برآمد ہونا شروع ہو جاتی ہیں اور کبھی وہ مریم نواز کی خوبصورتی پر اس طرح تبصرہ کرتے ہیں کہ پورا پنڈال ہی تالیوں سے گونج اٹھتا ہے۔گزشتہ دنوں ایک ویڈو وائرل ہوئی جس میں ایک بچے کے ساتھ وفاقی وزیر علی امین گنڈاپور بیٹھے ہوئے ہیں اور وہ معصوم بچہ گاڑی چلا رہا ہے۔
اب اس واقعہ کی تفصیل بتاتے ہوئے علی امین گنڈار پور نے کہا کہ گاڑی بھی میری ہے اور بیٹا بھی میرا ہے اور جس زمین میں یہ گاڑی چل رہی ہے وہ زمین بھی میری ہے تو ا سکے بعد کوئی آپشن ہی نہیں بچ جاتا کہ بچے کے گاڑی ڈرائیو کرنے والے معاملے پر کوئی آپشن ہونا چاہیے۔
وفاقی وزیر برائے امور کشمیر و گلگت بلتستان علی امین گنڈا پورکو اپنے کم عمر بیٹے سے گاڑی چلوانے پر سوشل میڈیا پر کڑی تنقید کا نشانہ بنایا جارہا ہے۔
گزشتہ دنوں سوشل میڈیا پر ایک ویڈیو وائرل ہوئی تھی جس میں بچہ گاڑی چلا رہا ہے، علی امین گنڈا پور ساتھ والی سیٹ پر بیٹھے ہیں۔ویڈیو وائرل ہونے کے بعد وفاقی وزیر کو شدید تنقید کا نشانہ بنایا گیا ہے جس پر اب علی امین گنڈاپور نے جواب دیا ہے۔وفاقی وزیر نے ٹوئٹ میں لکھاکہ یہ میری اپنی زمین، میری اپنی گاڑی اور میرا اپنا بیٹا ہے، ٹریفک کے قوانین صرف سڑک، شاہراہ یا موٹروے پر لاگو ہوتے ہیں، اس لیے کسی قانون کی خلاف ورزی نہیں کی گئی۔ علی امین کی منطق پر سابق انسپکٹر جنرل (آئی جی) پولیس موٹر وے ذوالفقار چیمہ بھی حیران رہ گئے اور کہاکہ گاڑی وہی چلا سکتا ہے جس کے پاس لائسنس ہو، وزیر کے انداز سے تکبر چھلکتا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں