گرفتاری کا ڈر ‘ نامعلوم شخص پشاور ایئرپورٹ پر قیمتی موبائل سے بھرا بیگ چھوڑ کر فرار

پی آئی اے کی پرواز پی کے 284 دبئی سے پشاور پہنچی تو مسافروں نے بیلٹ سے اپنا سامان وصول کرلیا لیکن ایک بیگ بیلٹ پر مشتبہ پایا گیا بیگ میں 141 آئی فون موجود تھے

پشاور ( کرائم ڈیسک ) گرفتاری کے ڈر سے نامعلوم شخص پشاور ایئرپورٹ پر قیمتی موبائل سے بھرا بیگ چھوڑ کر فرار ہوگیا۔ اے آر وائی نیوز کے مطابق پی آئی اے کی پرواز پی کے 284 دبئی سے پشاور پہنچی تو مسافروں نے بیلٹ سے اپنا سامان وصول کرلیا لیکن ایک بیگ بیلٹ پر مشتبہ پایا گیا ، جس پر سول ایوی ایشن اتھارٹی کے عملے نے بیگ کو اپنی تحویل میں لے لیا اور جب بیگ کو چیک کیا گیا تو اس میں لاکھوں روپے مالیت کے قیمتی موبائل فون برآمد ہوئے۔
بتایا گیا ہے کہ بیگ میں 141آئی فون موجود تھے ، سی اے اے نے موبائل سے بھرا بیگ کسٹم کے حوالے کردیا ، جس کے بعد کسٹم نے سی سی ٹی وی فوٹیج کی مدد سے مسافر کی تلاش شروع کردی۔ دوسری طرف پشاور کے باچا خان انٹرنیشنل ائیرپورٹ پر ایک نئی روایت کا آغاز کرتے ہوئے ادارے کے عہدیداروں نے فرض شناس اور دیندار نائب قاصد محمد جعفر کو ریٹائرمنٹ پر انوکھے انداز میں خراج تحسین پیش کیا۔

سینئرایڈیشنل ڈائریکٹر عبیدالرحمن عباسی نے 35 سال سے اپنی ڈیوٹی مکمل ایمانداری اور فرض شناسی کے کرنے کے صلے میں نائب قاصد کو ایک دن کے لئے اعزازی طور ائیرپورٹ مینجر بنادیا۔ اس موقع پر سینئرایڈیشنل ڈائریکٹر عبیدالرحمن عباسی کا کہنا تھا کہ مدت ملازمت پوری کرنے والے سی اے اے کے نائب قاصد محمد جعفر نے دوران ملازمت فرض شناسی کی اعلیٰ مثال قائم کی ہے۔
ان کا کہنا تھا کہ محمد جعفر نے دوران ملازمت اپنی ڈیوٹی کے دوارن اپنے فرائض بہت خوش اسلوبی سے انجام دیئے، 35سال ملازمت کے دوران ہمیں ان کیخلاف کوئی شکایت موصول نہیں ہوئی۔ باچا خان انٹرنیشنل ایئر پورٹ کے چیف آپریٹنگ آفیسر عبید الرحمان عباسی کے مطابق جعفر نے اپنی پوری سروس میں کبھی کوتاہی نہیں کی اور اسے نہ کبھی شوکاز ملا نہ ہی اسکے خلاف کوئی رپورٹ فائل ہوئی۔ انکا کہنا تھا کہ رٹائرمنٹ کے دن سول ایوی ایشن اتھارٹی کی جانب سے انکی خدمات کو سراہا گیا اور جعفر کے لئے دعوت رکھی گئی۔ جعفر کو ایک دن کے لیے اعزازی ایئر پورٹ مینیجر بھی تعینات کیا گیا اور ایک دن کا اعزازیہ دینے کے بعد پروٹوکول اور سرکاری گاڑی میں نائب قاصد جعفر کو گھر رخصت کیا گیا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں