جام کمال نے استعفیٰ دے کر پارٹی کو بچا لیا ہے

جام کمال اب بھی ہمارے بڑے ہیں ہم ان سے مشاورت جاری رکھیں گے۔ ترجمان بلوچستان عوامی پارٹی

کوئٹہ (نیوز ڈیسک) : بلوچستان عوامی پارٹی کے ترجمان نے جام کمال کے استعفے پر رد عمل دیتے ہوئے کہا کہ جام کمال نے استعفٰی دے کر پارٹی کو بچا لیا ہے۔ تفصیلات کے مطابق کوئٹہ میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے ترجمان بلوچستان عوامی پارٹی عبدالرحمان کھیتران نے کہا کہ جام کمال اب بھی ہمارے بڑے ہیں ہم ان سے مشاورت جاری رکھیں گے۔
اُن کا کہنا تھا کہ جام کمال نے استعفٰی دے کر پارٹی کو بچا لیا ہے۔ ہم ایک نئی طرز کی حکومت قائم کریں گے جس کا مظاہرہ جلد ہوگا ، اسپیکر عبدالقدوس بزنجو اپنے عہدے سے مستعفی ہوجائیں گے ، اسمبلی میں نیا اسپیکر بنایا جائے گا جو بہت تجربہ کار ہوگا۔ پارٹی ترجمان نے کہا کہ صوبے میں ایک ایسا نیا ا وزیراعلیٰ لائیں گے جو عوام کی دسترس میں ہوگا، ہم نے ایک کمیٹی بھی تشکیل دے دی ہے جو اپوزیشن سمیت تمام جماعتوں اور اراکین اسمبلی سے رابطہ کرے گی، ہم تمام جماعتوں کو ساتھ لے کر چلیں گے اور اپوزیشن بھی ہمارے ساتھ ہوگی۔

ترجمان بی اے پی نے مزید کہا کہ پیر کو ہونے والے اجلاس میں عدم اعتماد کی تحریک کو نمٹا دیا جائے گا۔ یاد رہے کہ پاکستان کے صوبہ بلوچستان میں سیاسی بحران شدت اختیار کرچکا ہے جس کے نتیجے میں ناراض ارکان اور اپوزیشن کو بڑی کامیابی ملی ہے اور وزیراعلیٰ جام کمال نے اپنے عہدے سے استعفیٰ دے دیا تھا۔ جام کمال کے استعفیٰ دینے کے بعد صوبائی کابینہ تحلیل ہوگئی۔
تاہم اب نئے وزیراعلٰی بلوچستان کے لیے میر عبدالقدوس بزنجو کے نام پر اتفاق کرلیا گیا ہے۔اتوار اور پیر کی درمیانی شب اسپیکر بلوچستان اسمبلی میر عبدالقدوس بزنجو کی رہائش گاہ پر ہونے والے اجلاس میں سابق وزیراعلٰی بلوچستان جام کمال خان کے وزارت اعلیٰ کے منصب سے مستعفی ہونے کے بعد نئے قائد ایوان کے لئے اسپیکر بلوچستان اسمبلی میر عبدالقدوس بزنجو جب کہ نئے اسپیکر بلوچستان اسمبلی کے لئے سابق وزیراعلیٰ بلوچستان میر جان محمد جمالی کے نام پر اتفاق کیا گیا۔ اتحادی جماعتوں سے دونوں ناموں کی توثیق کروائی جائے گی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں