21

وزراء سے اضافی سیکیورٹی واپس لینے کا عمل شروع

وزراء سے اضافی سیکیورٹی واپس لینے کا عمل شروع

وزیرِاعظم عمران خان کی ہدایت پر وفاقی وزراء سے اضافی سیکیورٹی واپس لینے کا عمل شروع ہو گیا، ذرائع کے مطابق متعدد وفاقی وزراء سے اضافی سیکیورٹی واپس لے لی گئی۔

ذرائع نے بتایا ہے کہ کابینہ ڈویژن اور اسلام آباد پولیس نے وزراء سے اضافی سیکیورٹی واپس لی ہے، اب تک اسپیکر اور ڈپٹی اسپیکر قومی اسمبلی سمیت 7 وفاقی وزراء سے اضافی سکیورٹی واپس لی گئی ہے۔

آئی جی اسلام آباد کی وزیرِاعظم عمران خان سے ملاقات کے بعد وفاقی وزراء کی سیکیورٹی پر تعینات اضافی نفری واپس منگوا لی گئی ہے، وزراء کے پاس اسلام آباد پولیس کے صرف 2، 2 اہلکار سیکیورٹی پر مامور رہیں گے۔

ایک وزیر کے پاس سیکیورٹی پر مامور 5 اہلکاروں میں سے 3 کو واپس بلا لیا گیا ہے، متعدد وفاقی وزراء کے ساتھ اسلام آباد پولیس کے 2 اہلکار ڈیوٹی دیں گے۔

ذرائع نے مزید بتایا ہے کہ چیئرمین سینیٹ کو دی گئی نفری برقرار رہے گی، جبکہ قومی اسمبلی کے اسپیکر اور ڈپٹی اسپیکر کو دی گئی اضافی نفری میں بھی کمی کر دی گئی ہے۔

ذرائع نے یہ بھی بتایا ہے کہ شیریں مزاری اور پرویز خٹک سمیت متعدد وزراء سے اضافی سیکیورٹی واپس لی گئی ہے۔

واضح رہے کہ وزیرِ اعظم عمران خان نے گزشتہ کابینہ کے اجلاس میں پروٹوکول کم کرنے کا فیصلہ کیا تھا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں