بھارت میں ہندو ڈاکٹر نے آخری سانسیں لینے والی کورونا مریضہ کے لیے کلمہ پڑھ دیا

نئی دلی(حالات نیوز ڈسک) بھارت میں آخری سانس لینے والی مریضہ کے لیے ہندو ڈاکٹر نے کلمہ پڑھ دیا۔غیر ملکی میڈیا کے مطابق دبئی میں میں بڑی ہونے والی ڈاکٹر ریکھا نے دیکھا کہ اس کا مسلمان مریض مر رہا ہے تو انہوں نے اس کے لئے کلمہ پڑھا۔ڈاکٹر نے جیسے ہی کلمہ ختم کیا تو مریض کی جان نکل گئی۔چونکہ کورونا وارڈ میں کسی کو داخل ہونے کی اجازت نہیں ہوتی اسی لیے ڈاکٹر رکھا وارڈ میں موجود تھی اور جب انہوں نے دیکھا کہ مریضہ آخری سانسیں لے رہی ہے تو انہوں نے مریضہ کے سامنے کلمہ پڑھا اور مریضہ نے اس کے ساتھ دہرایا۔
ڈاکٹر ریکھا کے مطابق مریض کو شدید نمونیا تھا جبکہ داخلے کے دوران مریضہ کی حالت بہت خراب تھی اسے وینٹی لیٹر پر رکھا گیا تھا تاہم 17 روز بعد مریضہ کے اعضائ خراب ہونا شروع ہوگئے تھے جس کے بعد مریضہ کے اہل خانہ کی اجازت سے وینٹی لیٹر ہٹا دیا گیا تھا۔
انہوں نے کہا کہ مریضہ کے خاندان کا کوئی فرد وہاں ہوتا تو وہ بھی یہی کرتا جو میں نے کیا ہے۔ڈاکٹر ریکھا کے اس اقدام کو مسلمانوں کی جانب سے بہت سراہا جا رہا ہے۔دوسری جانب بھارت میں گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران مہلک کورونا وائرس نی4ہزار 1سو94انسانی جانیں نگل لیںجبکہ اس دوران 2لاکھ 57ہزار نئے کورونا کیسز سامنے ا?ئے ہیں۔ کشمیرمیڈیاسروس کے مطابق بھارتی وزارت صحت کی طرف سے جاری تازہ اعداد وشمار میں کہا گیا کہ 4ہزار 1سو94 کی تازہ اموات سے ملک میں مہلک وائرس سے ہلاکتوںکی مجموعی تعداد بڑھ کر 2لاکھ95ہزار525ہوگئی ہے جبکہ 2لاکھ 57ہزار نئے کورونا کیسزسے ملک میں اب تک مہلک وبا سے متاثر ہونے والوں کی کل تعداد 2کروڑ 62لاکھ،89ہزار2سو 90ہوگئی ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں