39

اگر قرارداد پہلے پیش کردیتے تو قتل و غارت نہ ہوتی، احسن اقبال

اگر قرارداد پہلے پیش کر دیتے تو قتل و غارت نہ ہوتی،احسن اقبال

پاکستان مسلم لیگ ن کے رہنما احسن اقبال کا کہنا ہے کہ قومی اسمبلی میں اگر قرارداد پہلے پیش کردیتے تو قتل و غارت نہ ہوتی، قومی اسمبلی کا ہر رکن کارروائی میں حصہ لینا چاہ رہا ہے، حکومت ایوان کو بے خبر رکھ کر قرارداد پاس کروانا چاہتی ہے۔

 جیونیوز کے پروگرام’آج شاہزیب خانزادہ کے ساتھ‘ میں گفتگو کرتے ہوئے احسن اقبال نے کہا کہ معاملہ ریاستی نوعیت کا ہے، ہر کام میں سنجیدگی نظر آنی چاہیے، حکومت کی جانب سے کوئی بریفنگ نہیں دی گئی۔

احسن اقبال نے کہا کہ ہم جاننا چاہتے ہیں ریاستی اداروں کی کیا رائے ہے، جس معاملے کو التوا میں ڈالنا ہو کمیٹی میں بھیجتے ہیں۔

رہنما مسلم لیگ ن نے کہا کہ قومی اسمبلی کو بھی حکومت نے مذاق بنادیا ہے، وزیر اعظم کو معاملے سے متعلق بیان دینا چاہیے۔

احسن اقبال نے کہا کہ ریاستی اداروں کے فیصلے انفارمڈ ہونے چاہئیں، قومی اسمبلی اسکول کا ڈیبیٹنگ کلب نہیں، پوری دنیا دیکھتی ہے۔

اسی پروگرام میں شریک وفاقی وزیر نورالحق قادری نے کہا کہ پارلیمنٹ کے سارے بزنس کمیٹی کے ذریعے ہی چلتے ہیں، اہم ترین ستون اگر گائیڈ لائن دے گی تو سب نے اس کے ساتھ چلنا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں